...
کلیات احمد احمد فراز
کلیات احمد فراز
نسخے: 02
شاعر کا نام:احمد فراز
کتاب کا نام :کلیات احمد فراز
زبان:اردو
ناشر:فرید بک ڈپو (پرائیویٹ) لمیٹڈ
مرتب: فاروق ارگلی
قیمت:۵۰۰
صفحات جلد اول: ۱۰۰۴
۱۲۰۴:صفحات جلد دوم
معاون:پی ڈی ایف بک ڈاٹ ان لائن

عرض مرتب
اُردو شاعری ولی ، میر، اقبال، جوش ، جگر ، فراق اور فیض کے ادوار سے ارتقائی مراحل طے کرتی ہوئی عہد نو میں پہنچی تو قبول عام کی تمام سرحدوں کو پار کر گئی ۔ احمد فراز کی ہمہ رنگ شاعری بلا شبہ اردو کے شعری ادب کا نقطۂ عروج ہے اور اس عہد کا مکمل منظر نامہ بھی ۔ احمد فراز اُردو کے ایسے خوش بیان شاعر تھے جنہیں دنیا بھر میں منعقد ہونے والے شعری اجتماعات میں سب سے زیادہ مقبولیت حاصل ہوئی ۔ اس حقیقت سے تو فراز کے نکتہ چین بھی انکار نہیں کر سکتے کہ فراز اور اُن کا کلام عالمی شہرت اور مقبولیت کی جن بلندیوں کو چھو چکا ہے، اُن کے عہد کا کوئی اور شاعر وہاں تک نہیں پہنچ سکا۔ فراز پاکستان کے شہری تھے لیکن اُن کے کلام کی لازوال خوشبو زمان و مکان کی تمام حدیں پار کر کے چہار دانگ عالم میں پھیلی ہوئی ہے۔
مجھے بجاطور پر ناز ہے کہ مجاہد اُردو جناب علی صدیقی مرحوم کی قیادت میں عالمی اُردو کا نفرنس کے تاریخ ساز بین الاقوامی مشاعروں کے انتظام و انصرام کے دوران بارہا اس عظیم المرتبت شاعر کی خدمت اور میز بانی کے مواقع حاصل ہوئے۔ شہر میر و غالب میں اپنے نصف صدی کے صحافتی و ادبی سفر میں، میں نے اپنے عہد کی بہت سی رفیع الشان علمی وادبی ہستیوں کو قریب سے دیکھا ہے لیکن جناب احمد فراز کی خوش خلقی ، متانت، صاف گوئی ، بے باکی اور کھرے پن نے مجھے سب سے زیادہ متاثر کیا۔ میرا ایقان ہے کہ فراز بہت بڑے شاعر ہونے کے ساتھ ایک نفیس انسان بھی تھے۔
احمد فراز 14 جنوری 1931ء کو کوہاٹ کے ایک معزز سادات خاندان میں پیدا ہوئے ۔ ان کے والد سید محمد شاہ کا شمار کو ہاٹ کے محترم پیرزادوں میں ہوتا تھا کیونکہ اُن کا نسبتی تعلق حضرت حاجی بہادر سے تھا۔ حضرت حاجی بہادر کا مزار کو ہاٹ شہر میں مرجع خلائق ہے۔ احمد فراز کا اصل نام سید احمد شاہ تھا۔ اسے قدرت کا کرشمہ کہیں یا اُردو زبان کی جادو اثری کہ اُردو کے اتنے بڑے شاعر کی مادری زبان پشتو تھی ۔ آج بھی عام پختون لوگ پاکستان کی قومی زبان ہونے کے باوجود اُردو صحیح طریقے سے نہیں بول پاتے ، البتہ وہ فارسی کے زیادہ قریب ہیں ۔ لیکن احمد فراز کو قدرتی طور پر اردو و ڑھنے لکھنے اور بولنے کا شوق تھا اور اگر یہ کہا جائے کہ وہ پیدائشی شاعر تھے تو بھی غلط نہیں ہے ہوگا۔
اس بات کا اندازہ اس واقعے سے ہوتا ہے کہ جب وہ پانچ چھ برس کے تھے، عید کے موقع پر اُن کے والد احمد شاہ اور اُن کے بڑے بھائی سید مسعود شاہ کے لیے کپڑے خرید کر لائے ۔ احمد شاہ کو بھائی کے مقابلے میں اپنے کپڑے پسند نہیں آئے ، اس کا اظہار اُس ننھے بچے نے اس طرح کیا تھا ۔
لائے ہیں سب کے لیے کپڑے سیل سے
لائے ہیں میرے لیے کمبل جیل سے
آن لائن پڑھیے حصہ اول

آن لائن پڑھیے حصہ دوم

احمد فراز کے والد انہیں ریاضی اور سائنس کی تعلیم میں آگے بڑھانا چاہتے تھے لیکن ان کا میلان ادب کی طرف تھا، خاص طور پر اُردو شعر و ادب اُن کا پسندیدہ موضوع تھا۔ اُنہوں نے پیشاور کے مشہور ایڈورڈ کالج میں تعلیم مکمل کرتے ہوئے پہلے فارسی ایم اے اور اُس کے بعد اُردو ایم اے کی ڈگری حاصل کی۔ وہ زمانہ تعلیم سے ہی باقاعدہ شعر کہنے لگے تھے۔ فراز اُس دور کے مشہور ترقی پسند شاعر فیض احمد فیض اور علی سردار جعفری سے بیحد متاثر تھے، جن کا اثر ان کے ابتدائی کلام میں نظر آتا ہے۔ لیکن اُن کے تخلیقی ذہن نے جلد ہی اپنا مخصوص رنگ و آہنگ تلاش کر لیا۔ اُنہوں نے اپنا کیریر ریڈیو پاکستان پیشاور میں اسکرپٹ رائٹر کے طور پر شروع کیا ، مگر بعد میں وہ پیشاور یونیورسٹی میں اُردو کے استاذ مقرر ہوئے ۔ 1976ء میں جب حکومت پاکستان نے اکیڈمی آف لیٹرس کے نام سے ملک کا اعلیٰ ترین ادبی ادارہ قائم کیا تو فراز اُس کے پہلے ڈائریکٹر جنرل بنائے گئے۔
احمد فراز نے جب شاعری شروع کی تھی اُن کا نام ہوتا تھا احمد شاہ کو ہائی لیکن جب اُن کے کلام کی پورے ملک میں پذیرائی ہونے لگی اور اپنے وقت کے مقبول ترین شاعر فیض احمد فیض کے ساتھ اُن کے رابطے بڑھے تب فیض صاحب نے ہی انہیں فراز تخلص اختیار کرنے کا مشورہ دیا تھا۔ یہ مخلص اسم بام اسم بامسمی بن گیا جو احمد فراز کولا فانی شہرت کی بلندیوں تک لے گیا۔
احمد فراز اپنے عہد کے ایک سچے فنکار تھے، حق گوئی اور بے با کی اُن کی فطرت کا خاصہ تھا۔ اُنہوں نے حکومت وقت کی بدعنوانیوں اور عوام کے ساتھ نا انصافیوں کے خلاف ہمیشہ کھل کر آوازہ حق بلند کیا۔ جنرل ضیاء الحق کی آمریت پر سخت ترین تنقید کرنے پر انہیں گرفتار بھی کیا گیا، وہ چھ سال تک کناڈا اور یورپ میں جلا وطنی کا عذاب سہتے رہے۔

اوپر دیے گئے لنک سے آپ اس کتاب کو ڈاؤن لوڈ کر کے تمام مضامین کو بآسانی پڑھ سکتے ہیں۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top
Seraphinite AcceleratorOptimized by Seraphinite Accelerator
Turns on site high speed to be attractive for people and search engines.